مارننگ شو ہوسٹ ندا یاسر پر پابندی کا مطالبہ کیوں؟

سماء نیوز  |  Sep 17, 2020

تصویر: انسٹاگرام

سوشل میڈیا معروف مارننگ شو ہوسٹ ندا یاسر کے خلاف پابندی لگائے جانے مطالبہ سامنے آگیا ۔

گزشتہ ہفتے ندا یاسر نے اپنے پروگرام میں کراچی میں زیادتی کے بعد قتل ہونے والی 5 سالہ بچی کے والدین کو مدعو کیا تھا اور افسوس ناک واقعہ کی مزید تفصیلات بھی آن ائیر کیں گئیں۔

تاہم سوشل میڈیا پر بدھ کی شام مارننگ شو ہوسٹ ندا یاسر کے خلاف ٹرینڈ سامنے آیا اور ٹوئٹر صارفین نےندا یاسر پر پابندی لگانے کا مطالبہ کیا ۔

سماء ڈیجیٹل نے ندا یاسر سے رابطہ کیا تو اس حوالے سے انہوں نے گفتگو کرنے سے پرہیز کرتے ہوئے کہا کہ پہلے وہ اپنے چینل سے بات کریں گی اور پھر کوئی بیان دیں گی ۔

سوشل میڈیا پر کچھ صارفین نے ندا یاسر کے خلاف پیمرا میں شکایت درج کرانے اور ساتھ ساتھ ان کے مارننگ شو پر بھی پابندی لگانے کا مطالبہ کیا۔

Shame on you.ARY Digital’s Morning Show host Nida Yasir invited the parents of a 5 year old r*pe and m*urder victim on her show and asked them extremely insensitive questions, making the mother cry and the father barely able to speak.Here’s what you can do : pic.twitter.com/9ttz5Idgnv

— Rizwan Sanawar (@rizwan_sanawar) September 16, 2020 Call PEMRA at 080073672 and ask for the Morning Show to be banned. If you’re not comfortable speaking impromptu, I attached a script that you can use.#JusticeForMarwah @reportpemra @arydigitalasia pic.twitter.com/40mAfMkUfv

— rama🌸 (@strawchewer_) September 16, 2020 She asked disgusting questions from Marwa parents PEMRA should

— Aisha Khan (@AishaKhan_123) September 16, 2020

مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More